سوزوکی مہران کا دور ختم ہوگیا،متبادل کے طورپر660سی سی آلٹو پیش کردی گئی، قیمت کتنی ہوگی، جانئے

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)تین دہائیوں سے راج کرنے والی مہران کار کی متبادل نئی 660 سی سی آلٹو پیش کر دی گئی ہے۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ پاک سوزوکی موٹرز نے اپنے صارفین کے لیے مہران کی متبادل نئی 660 سی سی آلٹو پیش کر دی ہے۔اس حوالے سے پاک چین دوستی کے سیینڑ میں ایک تقریب منعقد ہوئی۔منعقد تقریب میں چیف ایگزیکٹیو آفیسر پاک سوزوکی موٹرز ماسومی ہارانو نے مینیجنگ ڈائریکٹر اور سینئیر مینیجر کے ہمراہ “موری سرخ رنگ” کی کار لانچ کی۔آلٹو کچھ منفرد رنگوں میں دستیاب ہے۔نئی آلٹو پاکستان میں بننے والی پہلی 660 سی سی ماڈل کار ہے جس کے تین ماڈلز متعارف کرائے گئے ہیں۔دو ماڈلز کو مکمل طور پر مینوئل اور ایک ماڈل کو خودکار

رکھا گیا ہے۔جس کی قیمتیں 999,000 سے لے کر 1,295,000 کے درمیان رکھی گئی ہیں۔آرسیریز کے انجن، جدید ڈیزائن اور جاپانی ٹیکنالوجی کی حامل نئی 660 سی سی آلٹو بن قاسم پلانٹ میں بنائی گئی۔میڈیا رپورٹس میں مزید بتایا گیا ہے کہ سوزوکی کمپنی کا دعویٰ ہے کہ فیول اکانومی بہترین ہے جو تین سال وارنٹی کے ساتھ دستیاب ہے۔سوزوکی موٹرز زکے سی ای او کا کہنا ہے کہ پاکستان دنیا کی تیزی سے ابھرتی ہوئی معیشت ہے، اور آٹو موبائل انڈسٹری ملک کی معاشی ترقی میں مدد فراہم کرے گی۔خیال رہے پاک سوزوکی نے گزشتہ سال 80 کی دہائی سے مارکیٹ میں مقبول رہنے والی مہران کی پیداوار کو بند کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔سوزوکی مہران کیدنیا بھر میں پیداوار 90 کی دہائی میں بند کر دی گئی تھی، تاہم پاکستان میں اس گاڑی کی پیداوار آج تک جاری رہی۔ مارکیٹ میں نئی کمپنیوں کی آمد کے باعث مقابلے میں اضافہ ہوا ہے، اور نئی اور جدید سے جدید اور قدرے کم قیمت گاڑیاں فروخت کیلئے پیش کی جا رہی ہیں۔ اسی باعث سوزوکی پاکستان نے گزشتہ برس دسمبر میں مہران کو مارکیٹ میں فروخت کیلئے پیش نہ کرنے کا اعلان کیا تھا۔جس کے بعد سوزوکی آلٹو کے جدید ماڈل کو 800 سی سی سوزوکی مہران کی متبادل کے طور پر مارکیٹ میں فروخت کیلئے پیش کرنے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔ پاکستان سوزوکی کی جانب سے سوزوکی مہران کی پیداوار بند کرنے کے فوری بعد سوزوکی آلٹو کی پاکستان میں پیداوار کا آغاز بھی کیا گیا تھا۔