سب کو پتہ ہے کہ نوازشریف کو جیل کرپشن کی وجہ سے نہیں ہو، بلاول بھٹو

لاہور(نیوز ڈیسک)سب کو پتہ ہے کہ نوازشریف کو جیل کرپشن کی وجہ سے نہیں ہوئی۔ بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ سب کو پتہ ہے کہ نوازشریف اس وقت لندن میں عمران خان کی انتقامی سیاست کی وجہ سے موجود ہیں۔ان کو کرپشن کی وجہ سے جیل نہیں بھیجا گیا۔اسی وجہ سے ماضی میں پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنماوں نے بھی جیلیں کاٹی ہیں۔نیب کے اوپر تنقید کرتے ہوئے بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ یہ ایک کالا قانون ہے جس کو اپنے انتقام کے لئے استعمال کیا جاتا ہے، اس کا جلد خاتمہ ہونا چاہیئے۔ چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا حکومتی بیانیہ پہلے دن سے ٹوٹ پھوٹ کا شکار تھا،

سیاسی انتقام کی وجہ سے ہمارے رہنما جیل میں ہیں، سیاسی مخالف کے مرحوم بھائی کو بھی نہیں چھوڑا، خور شید شاہ کے مرحوم بھائی کو نیب نے نوٹس جاری کیا، آئی ایم ایف ڈیل کے مطابق معاشی فیصلے کیے جاتے ہیں، ایسا نہیں کہ ٹیکس نہ دینے والے چور اور ڈاکو ہیں، ہمارے ٹیکس نظام میں خامیاں ہیں۔بلاول بھٹو کا کہنا تھا موجودہ حکومت کے آتے ہی معاشی بحران پیدا ہوگیا، جمہوریت پسند قوتیں کسی نہ کسی وجہ سے متحد نہیں، نیب اور معیشت ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے، تاجروں کے بعد عمران صاحب نے بھی کہہ دیا نیب اور معیشت ساتھ نہیں چل سکتے، اعجاز جاکھرانی الیکشن میں جیتے مگر سلیکشن میں محمد میاں سومرو سے ہارے، بینظیر بھٹو شہید اور آصف زرداری تمام کیسز میں باعزت بری ہوئے، سابق صدر آصف زرداری کی پٹیشن میں انصاف کے منتظر ہیں۔چیئرمین پیپلزپارٹی نے مزید کہا پی ٹی آئی، آئی ایم ایف بجٹ سے چھوٹے طبقے کا معاشی قتل ہوگا، اس ملک کے عوام نے ان کو پہچان لیا ہے، اضافہ دور کی بات تنخواہ اور پنشن نہیں مل رہی، حکومت نے کروڑوں لوگوں کو بے روزگار کر دیا، سفید پوش طبقہ، کسان، مزدور معیشت چلاتے تھے، ہم نے تنخواہوں میں اضافہ کیا، روزگار دیا۔شیخ رشید سے متعلق سوال پر بلاول بھٹو کا کہنا تھا گٹر کی باتیں گٹر میں چھوڑیں، شیخ رشید ہر سلیکٹڈ حکومت میں آتے ہیں، وہ ہمیشہ سلیکٹڈ وزیر رہیں گے، حیرانی کی بات ہے شیخ رشید ابھی تک وفاقی وزیر ہیں، گزشتہ دور میں حادثے پر عمران خان وزیر ریلوے کے استعفیٰ کا مطالبہ کرتے تھے، یہ سلیکٹڈ کی آخری باری ہے، ان سلیکٹڈ کے ساتھ جو ہوگا آپ سب کو بہت مزہ آئے گا۔