قوم کو مبارک ہو،آرمی ایکٹ کا ترمیمی بل متفقہ طور پر منظور کرلیاگیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے دفاع نے آرمڈ سروسزایکٹ میں ترمیم کے بل منظور کرلیے ہیں، بل کے مسودے کل قومی اسمبلی اجلاس میں پیش کیے جائیں گے، وزیردفاع پرویز خٹک نے قوم کو مبارکباد دیتے ہوئے بتایا کہ تمام سیاسی جماعتوں نے متفقہ طور پر آرمی ایکٹ میں ترمیم کے بل منظور کرلیے ہیں۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے دفاع کے دوسرے سیشن میں آرمڈ فورسز کی سروسزایکٹ میں ترمیم کے بل منظور کرلیے گئے ہیں، ترمیمی بل تینوں آرمڈ فورسز بری، بحریہ اور فضائیہ کے سربراہان کی مدت ملازمت میں توسیع اور تعیناتیوں سے متعلق تھے۔ترمیمی بل کے

مسودے کل قومی اسمبلی اجلاس میں پیش کیے جائیں گے۔وزیردفاع پرویز خٹک نے قوم کو مبارکباد دیتے ہوئے بتایا کہ سروسزایکٹس میں ترمیم کے بلزمتفقہ طورپر منظور ہوگئے۔تمام سیاسی جماعتوں نے متفقہ طور پر قائمہ کمیٹی دفاع میں آرمی ایکٹ میں ترمیم کے بل منظور کرلیے ہیں۔ واضح رہے اس سے قبل بھی قائمہ کمیٹی نے بلز منظور کیے تھے لیکن قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی دفاع میں آرمڈ فورسز سروسز ایکٹ میں ترمیم کیلئے قواعد کی خلاف وزری کا انکشاف ہوا تھا، جس کے باعث آج 6 جنوری سوموار کو دوبارہ اجلاس ہوا، اجلاس میں بری، فضائیہ اور بحریہ افواج کے ایکٹ میں ترامیم دوبارہ زیرغور آئیں۔ وزیردفاع کا کہنا ہے کہ قائمہ کمیٹی دفاع نے آج بل منظور کرلیے ہیں جبکہ اس سے قبل قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی دفاع نے آرمڈ فورسز ایکٹ میں ترمیم کیلئے مسودہ تیار کیا تھا، جس کو باقاعدہ قومی اسمبلی کے اجلاس میں پیش بھی کیا گیا۔ لیکن اپوزیشن جماعتوں نے اعتراض کیا تھا کہ قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی کا اجلاس قواعدوضوابط کے مطابق نہیں ہوا، اجلاس میں ووٹنگ بھی نہیں کروائی گئی۔ تاہم آرمڈ فورسز ایکٹ میں ترمیم کیلئے بل کو منظور کروانے کیلئے قومی اسمبلی کے اجلاس میں پیش کیا گیا جہاں پر اس بل پر اعتراض لگا دیا گیا اور پھر دوبارہ قائمہ کمیٹی سے منظوری کیلئے بھیجنے کا کہا گیا۔